سعودی عرب میں حج اور عید الاضحیٰ کس تاریخ کو ہوگی؟ ماہرین ِ فلکیات نے پیش گوئی کر دی

مکہ (مانیٹرنگ ڈیسک ) سعودی ماہر فلکیات کا کہنا ہے کہ سعودی عرب میں عید الاضحیٰ اکتیس جولائی کو ہونے کے امکانات ہیں، سعودی عرب میں ذوالحجہ کا چاند اکیس جولائی کو غروب آفتاب کے بعد واضح طور پر دیکھا جاسکے گا۔ تفصیلات کے مطابق سعودی ماہرین فلکیات کی جانب سے ملک

” ”
” ”
میں عید الاضحیٰ اکتیس جولائی کو ہونے کی پیش گوئی کر دی گئی ہے۔ ماہرین فلکیات کی جانب سے دعویٰ کیا گیا ہے کہ سعودی عرب میں ذوالحجہ کا چاند اکیس جولائی کو غروب آفتاب کے بعد دیکھا جاسکے گا، چاند کی پیدائش پیر کی رات کو ہوگی اور منگل کی رات کو واضح طور پر نمودار ہوجائے گا، اس لحاظ سے سعودی عرب میں 10 ذو الحجہ 31 جولائی بروز جمعہ ہوگی۔ اس حوالے سے سعودی عرب کی سپریم کورٹ کی جانب سے سعودی عوام کو ہدایات جاری کر دی گئیں ہے کہ جو بھی سعودی شہری چاند کو دیکھے تو گواہی اپنی قریبی عدالت میں دے، کوئی بھی مسلمان ذو الجہ کے چاند کو اگر اپنی آنکھ سے یا پھر ٹیلی سکوپ کی مدد سے دیکھ لیتا ہے تو پھر اپنی گواہی وک وہ قریبی عدالت میں دے گا تو ہی اسکی گواہی تسلیم کی جائے گی، عام لوگ بھی رویت ہلال کمیٹی کی اجتماع میں شرکت کر سکتے ہیں۔ اس حوالے سے ماہرین فلکیات نے آگاہ کر دیا ہے کہ ذولحجہ کا چاند پیر کے روز پیدا ہوگا ، اس لیے اسے فوری طور پر دیکھنا ممکن ہی نہیں ہے، چاند اگلے روز غروب آفتاب کے بعد ہی دیکھا جاسکے گا۔خیال رہے کہ ذو الحجہ کے مہینے کو اسلام میں اس لیے بھی فضلیت دی گئی ہے کہ یہ اسلامی سال کا آخر مہینہ ہوتا ہے اور اس مہینے میں لاکھوں فرزندان اسلام فریضہ حج ادا کرتے ہیں لیکن اس سال کورونا وبا کی وجہ سے لاکھوں فرزندان اسلام فریضہ حج کی ادائیگی سے محروم رہ جائیں گئے۔

source:https://hassannisar.pk/

50% LikesVS
50% Dislikes